نئی حلقہ بندی کے بعد الیکشن کالعدم قرار دیا جائے، متحدہ


متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان نے نئی بلدیاتی حلقہ بندیوں کے بعد الیکشن کالعدم قرار دینے کا مطالبہ کردیا۔

ایم کیو ایم رہنما مصطفیٰ کمال نے پریس کانفرنس میں کہا کہ سندھ میں بلدیاتی الیکشن کے پہلے مرحلے میں لوگوں کو درست شمار کرنا تھا مگر نہیں کیا گیا، پھر حلقہ بندیاں غلط کی گئیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ حیدرآباد میں دیہی علاقوں کو شہر کے ساتھ ملا دیا گیا، اب میئر کبھی شہری علاقوں سے نہیں آسکتا۔

ان کا کہنا تھا کہ نوے نوے ہزار پر یوسی بنائی گئی، اگر محرومی بڑھی تو نوجوانوں کے گروپ بن جائیں گے جو ہم سے کنٹرول نہیں ہوسکیں گے۔

مصطفیٰ کمال نے مزید کہا کہ آپ حیدرآباد اور کراچی کا میئر لاکر کیا سمجھ رہے ہیں کہ ایٹمی اثاثوں کا اختیار آگیا ہے؟




Source link

About admin

Check Also

سیلاب متاثرہ کسانوں کو گندم کے بیج دیں گے، صوبائی مشیر زراعت منظور وسان

اسکرین گریب سندھ حکومت نے سیلاب سے متاثرہ کاشتکاروں کو گندم کے بیج کی رقم …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *